پرواز سے واپسی پے کبوتر کی سنبھال

کچھ کبوتر کی سنبھال کے بارے میں

کبوتر پروری کے شوق میں جب کوئی کبوتر پرواز کر کے واپس آتا ہے تو اس کی سنبھال بہت اہم چیز ہے. اگر آپ اپنے کبوتر کو پرواز سے واپسی پر اس کی حالت کے مطابق ٹھیک طرح سے سنبھالیں گے نہیں. تو آپ کا کبوتر خواہ کتنا ہے اچھا اور پروازی کیوں نہ ہو آپ اس سے اگلی پرواز اچھی نہیں لے سکیں گے. اور خاص طور پر جب موسم سخت گرم ہو تو اس وقت پرواز سے واپسی پے کبوتر کی سنبھال اور بھی زیادہ اہمیت اختیار کر جاتی ہے. اس لئے کبوتر پروری کے شوق سے وابستہ ہرشخص کے لئے بے حد ضروری ہے کہ اسے کبوتر کی سنبھال کے متعلق بنیادی باتوں‌کا علم ہو

اپنے آج کے اس آرٹیکل میں‌ہم ان تمام باتوں کا بنظرِ غور جائزہ لیں گے جن کا تعلق کبوتر کی سنبھال سے ہے.کبوتر جب سارا دن مسلسل پرواز کر کے واپس گھر آتا ہے تو اس کی حالت کافی ابتر ہوتی ہے. پرواز سے واپسی پے کبوتر کی حالت کا تعلق پرواز کے دورانیہ اور موسم کی شدت پر بھی منحصر ہوتا ہے. پرواز کی وجہ سے کبوتر کا جسم تھکاوٹ کا شکار ہو جاتاہے. مسلسل حرکت کی وجہ سے مسلز کھینچ جاتے ہیں.دوران پرواز فضا میں‌موجود گردوغبار بھی کبوتر پر اثر انداز ہوتا ہے. موسم سخت گرم ہوتو کبوتر کے جسم میں پانی اور نمکیات کی کمی ہو جاتی ہے. ایسی صورت میں بے حد ضروری ہوتا ہے کہ فوری طور پر کبوتر کی کھوئی ہوئی توانائی کو بحال کیا جائے.اور دوران پرواز اس نے جو سٹریس برداشت کی ہے اسے دور کیا جائے.کبوتر پروری کے شوق کے اصطلاح میں اسی عمل کو کبوتر کی سنبھال کا نام دیا جاتا ہے

کبوتر جب پرواز سے واپس آتا ہے تو کبوتر پروری کے شوق سے وابستہ افراد اسے سنبھالنے کے لئے اپنے اپنے تجربات کے مطابق مختلف طریقہ کار استعمال کرتے ہیں. جس کے لئے مختلف قسم کے گرم یا ٹھنڈے پانی بنائے جاتے ہیں. دیسی ادویات کا استعمال ہوتا ہے. اور پھر انہیں ایک مخصوص طریقہ کار کے تحت کبوتر کو استعمال کروایا جاتا ہے. اس کے علاوہ آج کل پرواز سے واپسی پر کبوتروں‌کو سنبھالنے کے لئے یورپ میں تیار ہونے والی مختلف کمپنیوں‌کی کئی قسم کی ادویات بھی دستیاب ہیں. جن کی بدولت کبوتر کی سنبھال کا عمل کافی حد تک آسان ہو گیا ہے. کیونکہ ان ادویات میں وہ تمام اجزاء شامل ہوتے ہیں جو کبوتر کو اپنی کھوئی ہوئی توانائی فوری طور پر بحال کرنے میں مدد دیتے ہیں. اس آرٹیکل میں ہم نہ صرف یہ کہ کبوتر کی بنیادی سنبھال کے طریقہ کار کے بارے میں بات کریں گے. بلکہ کبوتروں کی پرواز سے واپسی پر انہیں سنبھالنے کے دیسی طریقوں کے ساتھ ساتھ ان ادویات کے استعمال کے بارے میں بھی بات کریں گے جن سے کبوتر فوری طور پر ریکور ہو جاتے ہیں

بنیادی سنبھال کیا ہوتی ہے

آپ کا کبوتر جب پرواز کے بعد واپس گھر آتا ہے تو سب سے پہلے تقریبا دس منٹ تک جہاں پر آکر وہ بیٹھا ہے اسے بیٹھا رہنے دیں. تاکہ وہ اپنے ہوش و حواس کو بحال کر سکے. کیونکہ یہ ایک فطری سی بات ہے کہ کوئی بھی جاندار چرند،پرند یا انسان کسی سخت یا محنت طلب کام کرنے کو بعد اپنے جسم کو اس حالت میں لے کر آتا ہے جہاں اسے راحت و سکون کا احساس ہو. اس کی مثال ہم یوں لے سکتے ہیں کہ ایک اتھلیٹ جس نے کسی طویل دوڑ میں حصہ لیا ہو تووہ اسے مکمل کرنے کے بعد قدرتی طور پر کسی ایسی حالت میں کھڑا ہو جائے گا یا پھر بیٹھ یا لیٹ جائے گا جس حالت میں اس کے جسم کو سکون اور آرام مل رہا ہوگا. اسی طرح کبوتر بھی ایک طویل اور لمبی اڑان کے بعد جب آکر بیٹھتا ہے تووہ اپنے جسم کو اس حالت میں رکھ کے بیٹھا ہوتا ہے. جہاں پے اسے راحت و سکون کا احساس ہو رہا ہوتا ہے. سو اس لئے کچھ دیر تک اسے اسی حالت میں بیٹھا رہنے دیں. پھر دس منٹ کے بعد اگر کبوتر خود نیچے آ جائے تو ٹھیک ورنہ اسے احتیاط کے ساتھ نیچے اتار لیں

جب آپ کبوتر کو پکڑیں تو احتیاط کریں‌کے آپ کے ہاتھ گیلے نہ ہوں. اب اگر تو آپ پرواز سے واپسی پے اپنے کبوتر کو پلٹاتے ہیں تو یہ عمل کرلیں. کبوتر کو اگر آپ پلٹاتے ہیں تو اس کے لئے ضروری ہے کہ آپ کو کبوتر کو پلٹانے کا تجربہ ہو. ورنہ دوسری صورت میں اگر آپ ایسا کرتے تو آپ کبوتر کو نقصان پہنچا سکتے ہیں. کبوتر کو پلٹانے کے بعد اسی پانچ سے سات منٹ‌کے لئے کسی سایہ دار جگہ پے چھوڑ دیں تاکہ وہ اپنے ہواس بحال کر سکے. اس کے بعد ایک صاف سوتی کپڑا لے کر اس کی باریک سے بتی بنا کے اسے پانی کے ساتھ تھوڑا گیلا کرلیں.اور اسے کبوتر کے گلے میں‌پھیر کے اسے اچھی طرح سے صاف کریں. آپ کے ایسا کرنے سے پرواز کے دوران فضا میں موجود گردوغبار جو کبوتر کے گلے کے اندر جمع ہوا ہو گا صاف ہو جائے گا. کبوتر کی ناک کو بھی اسی کپڑے کے ساتھ اچھی طرح صاف کردیں

کبوتر کی کمر اور کندھوں کا نرمی سے آہستہ آہستہ مساج کریں. اپنے انگھوٹھے اور انگلیوں‌سے انہیں ہلکے سے دباتے رہیں. کبوتر کے پنجوں اور انگلیوں کا مساج کریں . انہیں آہستہ آہستہ دبائیں. مناسب مساج کے بعد کبوتر کی انگلیوں اور گردن کو بالکل نرمی کے ساتھ کھینچیں. چونکہ پرواز سے واپسی پے آپ اپنے کبوتر کے ساتھ یہ عمل کرتے رہتے ہیں. تو وہ اس بات کو سمجھے گا کہ یہ میری بہتری کے لئے ہو رہا ہے. ویسے بھی آپ کے یہ سب کچھ کرنے سے اسے راحت و سکون کا احساس مل رہا ہوگا. کبوتر کے جسم کا اچھی طرح مساج کرنے کے بعد اسے کسی سایہ دار اور ٹھنڈی جگہ پے کچھ دیر کے لئے چھوڑ دیں. اور پھر کبوتر کے پانی کے برتن میں سادہ تازہ پانی ڈال کر اس میں کبوتر کی چونچ لگوائیں‌جیسے ہی کبوتر بالکل تھوڑا سا پانی پی لے تو برتن کو اس کے آگے سے اٹھا لیں

جب کبوتر کچھ دیر میں پیا ہوا پانی چلا لے اور ڈروپنگ کر دے تو دوبارہ اس کے آگے تازہ سادہ پانی والا برتن رکھ کے دوبارہ سے اسے بالکل تھوڑا سا پانی پینے دیں اور پھر برتن کو کبوتر کے آگے سے اٹھا لیں اور اسے یہ پیا ہوا پانے ہضم کرنے دیں. اور پھر مزید کچھ دیر بعد کبوتر کو اس کی حالت کے مطابق اگر تازہ سادہ پانی سے ھی سنبھالنا ہے تو اسے وہ پانی پلائیں یا پھر اگر آپ نے اس کے لئے کوئی مخصوص پانی تیار کیا ہے تو پھر اسے وہ پانی پینے کے لئے دیں. ہم چونکہ یہاں ابھی بنیادی سنبھال کے بارے میں بات کر رہے تو اس لیئے پانی بنانے کے طریقوں یا ادویات کے استمعال کے بارے میں بعد میں بات کرتے ہیں. ایک بات ہمیشہ ذہن میں رکھیں کے پرواز سے واپس آئے ہونے کبوتر کو خوراک یا دانہ آپ نے اس وقت دینا ہے جب وہ اس پانی کو اچھی طرح ہضم کرلے جو آپ نے اسے پینے کے لئے دیا ہے

مزید پھر رات کوکبوتر کی تھکاوٹ دور کرنے،کھینچے ہوئے مسلز کو نرم کرنے کے لئے اس کے جسم کا خوب اچھی طرح مساج کریں. ایک موٹا سوتی کپڑا لے کر اس کی چھوٹی چھوٹی تہیں بنا کے اسے ایک گدی کی شکل دے دیں. اور اس گدی کو کسی ہلکے سے گرم توے پر رکھ کے آہستہ آہستہ کبوتر کے جسم کو گرمائش دیں. لیکن خیال رکھیں گدی کا کپڑا بس اتنا گرم ہو جو کبوتر کے لئے قابل برداشت ہو. اور اس سے کبوتر کے جسم اور مسلز کو راحت و سکون کا احساس ہو. اور اس کی تھکاوٹ دور ہو.اگر پرواز سے واپسی پے کبوتر کی ٹھیک طرح سے تھکاوٹ دور نہ ہو تو اس کے پٹھے کھینچ جاتے ہیں. جسکی وجہ سے وہ دوبارہ ٹھیک طرح سے پرواز نہیں کر پاتا. اور جلد واپس گھر آجاتا ہے.اگر آپ کا ایک اچھا پروازی کبوتر اپنی پرواز کم کرلیتا ہے تو اس کا واحد حل یہی ہے کہ اس کے جسم کا اچھی طرح مساج کر کے اس کی تھکاوٹ دور کی جائے اور اس کے مسلز کو پھر سے پہلی والی حالت میں لایا جائے

کبوتروں کے پرواز کم کرنے کی وجوہات

گرم موسم میں بعض اوقات اچھے کبوتر اس لئے بھی اپنی پرواز کم کر دیتے ہیں اگر ان کے جسم میں پانی یا نمکیات کی کمی ہو جائے. اس کے لئے ضروری ہے کہ گرم موسم میں کبوتروں کی پھرتیں لیتے وقت کبوتروں کو پینے کے لئے جو پانی دیا جاتا ہے اس کا خاص خیال رکھا جائے. ہفتے میں کم از کم دو مرتبہ اپنے کبوتروں کو پانی میں گلوکوز مکس کر کے پلائیں. اور دو ہی مرتبہ کبوتروں کے پانی کے برتن میں الیکٹرولائٹ مکس کر کے انہیں پینے کے لئے دیں. یا پھر اس کے علاوہ گرمی کی شدت کو اور اپنے کبوتروں کی کنڈیشن کو دیکھتے ہوئے ملٹھی، املی، آلوبخارے، آملے یا صندل وغیرہ کے پانی بھی کبوتروں کو استعمال کروائے جا سکتے ہیں. جن سے کبوتروں‌میں گرمی کو برداشت کرنے کی صلاحیت پیدا ہوتی ہے

یا پھر ایک اچھاپروازی کبوتر اس بناء پر بھی اپنی پرواز کم کر لیتا ہے جب کہ اس کا نظام ہضم ٹھیک طرح سے کام نہ کر رہا ہو. چونکہ جن دنوں‌میں ہم کبوتروں کو اڑا رہے ہوتے ہیں ان دنوں میں ہمیں کبوتروں کا دانہ پانی یا خوراک اسی وقت کرنا ہوتی ہے جب وہ پرواز سے واپس آتے ہیں. اس لئے ان کے دانہ پانی کا ٹائم چینچ ہوتا رہتا ہے. جس کا اثر معدے پے پڑتا ہے اور کبوتر کا نظام ہضم خراب ہو جاتا ہے. جس کے نتیجہ میں کبوتر اپنی پرواز کم کر لیتا ہے.
اس لئے ان دنوں میں اپنے کبوتروں کے نظام ہضم کا خاص خیال رکھیں. صبح کے وقت دیکھ لیں کہ کبوتر نے اس کے پاس جو خوراک تھی ہضم کی ہے یا نہیں. اور اگر نہیں کی تو اسے کوئی اچھا ہاضمے والا پانی بنا کر پلائیں اور جب وہ رات والی خوراک ہضم کر لے تو پھر اسے اگلے دن خوراک دیں

پرواز سے واپسی پر کبوتر کی حالت خراب ہونے کی وجوہات

بعض اوقات کچھ مخصوص حالات میں پرواز سے واپسی پر کبوتر کی حالت اتنی زیادہ خراب ہوتی ہے کہ اس کے لئے اپنے پائوں پے کھڑا ہونا ہی ممکن نہیں ہوتا. تو اس طرح کے صورت حال میں کبوتر کی بحالی کے لئے فوری اقدامات بے حد ضروری ہیں. اس طرح کی صورتِ حال اس وقت درپیش ہوتی ہے جب کبوتر اندرونی طور پر فٹ نہ ہو لیکن اس کے باوجود پرواز کر کے آئے. سخت گرم موسم میں اگر کبوتر رات کو دی جانے والی خوراک یا دانہ ہضم نہ کر پائے اور اسے صبح ایسے ہی اڑا دیا جائے تو بھی واپسی پر کبوترکی حالت کافی ناگفتہ بہ ہو سکتی ہے

اس کے علاوہ اس طرح کی صورت حال اس وقت بھی پیش آتی ہے جب کبوتر کسی نسخے کے زیراثر اڑتے ہوئے اتنی پرواز کر لے جتنی پرواز کرنے کی اس میں ہمت نہیں ہوتی. ہوتا یہ ہے کے نسخے کے اثر کی وجہ سے وہ پرواز تو کرتا رہتا ہے. اور خوش قسمتی سے گھر بھی واپس آ جاتا ہے. لیکن اپنی برداشت سے زیادہ پرواز کرنے کی وجہ سے وہ اس قابل نہیں ہوتا کہ اپنے پائوں پے کھڑا بھی ہو سکے. اس لئے جب بھی کسی نسخے کو استعمال کرتے ہوئے اپنے کبوتروں کو اڑائیں تو اس سے پہلے آپ کو یہ علم ہونا بے حد ضروری ہے کہ جب کبوتر پرواز سے واپس آئے گا تو اس کی سنبھال کے لئے کون سا طریقہ اختیار کرنا ہے. اگر آپ کو کبوتر کی سنبھال کے بارے میں علم نہیں ہے تو پھر آپ کا اس نسخے کو استعمال کر کے کبوتر سے پرواز لینا اس پے ظلم کے مترادف ہے

پرواز سے واپسی پرکبوتر کی سنبھال کے مختلف طریقے

اب ہم آتے ہیں اس طرف کے کبوتر کی حالت اور موسم کو دیکھتے ہوئےپرواز سے واپسی پے کبوتروں کو کن طریقوں سے سنبھالا جاتا ہے. پہلے ہم ذکر کریں گے دیسی ادویات، عرقیات یا جڑی بوٹیوں سے بنائے جانے والے پانی بنانے کے طریقوں کے بارے میں

آپ کا کبوتر جب اڑ کر واپس آتا ہے اور اس کی حالت بھی اتنی زیادہ خراب نہیں ہے تو اسے بنیادی سنبھال کے بعد ایک مرتبہ سادہ پانی میں چونچ لگوائیں. اور اس کے بعد آدھ پائو سادہ پانی میں ایک ڈھکن عرق گائو زبان اور ایک ڈھکن عرق گلاب مکس کر اس پانی میں دو مرتبہ کبوتر کی چونچ لگوائیں اور جب وہ یہ والا پانی ہضم کر لے تو اسے پھر یہی پانی پینے کے لئے دیں. اور جب وہ پانی بھی ہضم کر لے تو پھر کبوتر کے پانی کے برتن میں سادہ پانی ڈال کر اس کے آگے رکھ دیں. اور جتنی اسے طلب ہے وہ پانی پینے دیں. اور جب کبوتر سادہ پانی بھی ہضم کر لے تو پھر اسے جو بھی خوراک آپ دیتے ہیں اس کی دو گولیاں کھلا کے اسے چھوڑ دیں. اور پھر جب خوراک ہضم کر لے تو اسے باجرہ کھانے کے لئے دیں

سنبھال کا املی آلو بخارے والا پانی

موسم اگر گرم ہے توپرواز سے واپسی پے آپ درج ذیل طریقے سے بنائے ہوئے پانی کے ساتھ بھی اپنے کبوتر کو سنبھال سکتے ہیں. پانی بنانے کے لئے آلو بخارے کے تین دانے اور پچیس گرام املی لے کر انہیں رات کو کسی مٹی کے برتن میں ایک پائو سادہ پانی ڈال کر اس میں بھگو دیں. اور کسی ٹھنڈی اور سایہ دار جگہ پر رکھ دیں. جب آپ کا کبوتر اڑ کر واپس آئے تو اس سے ایک گھنٹہ پہلے املی اور آلوبخارے والے پانی کو ہاتھ سے ملنے کے بعد کسی ململ کے کپڑے میں چھان کے رکھ لیں. کبوتر کی بنیادی سنبھال کے بعد پہلے ایک مرتبہ اس کی سادہ پانی میں چونچ لگوائیں. اس کے کچھ دیر بعد املی آلوبخارے والا پانی دو سی سی سرنج کے ساتھ کبوتر کو پلا کر چھوڑ دیں. جب کبوتر وہ پانی چلا لے تو اسے ایک سی سئ عرق گائو زبان چار سی سی سادہ پانی کے ساتھ مکس کر کے سرنج کے ساتھ کبوتر کو پلا دیں. اور جب کبوتر یہ پانی بھی ہضم کرلے تو پھر سادہ پانی اس کے سامنے رکھ دیں

عرقیات کے استعمال سے کبوتر کی سنبھال

اگر موسم کافی زیادہ گرم ہے اور آپ کا کبوتر خراب حالت میں واپس گھر آیا ہے تو اسے درج ذیل طریقہ سے پانی بنا کر سنبھالیں . ایک لیٹر سادہ پانی مین پچاس سی سی عرقِ گلاب، پانچ سی سی عرقِ کاسنی، پانچ سی عرقِ صندل سفید،پانچ سی سی عرقِ نیلوفر اور دس سی سی عرقَ سونف اچھی طرح مکس کر کے اسے کبوتر کے پانی کے برتن میں ڈال دیں. اور اس بنے ہوئے پانی میں بنیادی سنبھال کے بعد کبوتر کی چونچ لگوا کے چھوڑ دیں. جب کبوتر پانی چلا کر بیٹھ کر دے تو دوبارہ اس کی اس بنے ہوئے پانی میں چونچ لگوائیں. کچھ دیر بعد کالے چنے جتنے مکھن میں کالی مرچ جتنی تباشیر مکس کر کے گولی بنا کے کبوتر کو کھلا دیں . اور پھر اس بنے ہوئے پانی میں ہی اس کی دو چونچیں لگوائیں اور جب کبوتر یہ پانی ہضم کر لے تو پھر اسے سادہ پانی پینے دیں جتنا وہ پینا چاہتا ہے. انشاءاللہ آپ کا کبوتر فٹ ہو جائے گا

اناردانہ،پودینہ،سفید زیرہ کے پانی سے کبوتر کی سنبھال

بعض اوقات ایسا ہوتا ہے کہ کبوتر پرواز سے واپسی پے کافی خراب حالت میں آتا ہے. اسے جو بھی پانی بنا کر پینے کے لئے دیا جاتا ہے اسے وہ ہضم نہیں کر پاتا. اس طرح کی صورتِ حال میں آپ ایک چٹکی انار دانہ، ایک چٹکی پودینے کی اور بیس دانے سفید زیرہ کے لے کر انہیں ہلکا سا کوٹ کے مکس کر لیں اور پھر اس میں ایک چائے والا کپ سادہ پانی کا ڈال کر اچھی طرح مکس کر کے اس پانی میں کبوتر کی چونچ لگوائیں. پانچ منٹ بعد دوبارہ کبوتر کی اسی پانی میں چونچ لگائیں. اور پھر ایک ماچس کی تیلی پے رکھ کے تباشیر اور اتنا ہی کشتہ مروارید لے کر انہیں ایک کالی مرچ جتنے مکھن میں‌مکس کر کے کبوتر کو کھلا دیں. اور سرنج کے ساتھ اس کبوتر کو ایک سی سی بنا ہوا پانی دے کر چھوڑ دیں. آپ کا کبوتر پانی چلا لے گا اور آہستہ آہستہ اپنے پیروں پے آنا شروع ہو جائے گا. اس طرح کی حالت میں کبوتر کو خوراک نہ دیں بلکہ گھنٹہ ڈیڑھ گھنٹہ بعد پانچ سی سی بکری کے دودھ میں پانچ قطرے دیسی شہد کے ملا کر سرنج کے ساتھ پلا دیں. اور پھر جب تک کبوتر اس دودھ کو ہضم کرکے خود خوراک نہیں مانگتا اسے خوراک نہ دیں

پرواز سے واپسی پر کبوتر کو خوراک کب دی جائے

اوپر میں نے آپ کو بتایا تھا کہ پرواز سے واپسی پے کبوتر کو اس وقت تک خوراک نہیں دینی جب تک وہ پانی جتنا بھی اس کو پلایا ہے ہم نے اسے ہضم نہ کر لے. پرواز سے واپس آئے ہوئے کبوتر کی سنبھال کا دارومدار کبوتر کے معدے کو چلانے پر ہوتا ہے. اگر کبوتر نے پانی ہضم نہ کیا ہو اور آپ اسے خوراک دے دیتے ہیں تو اس سے اس کا نظام ہضم خراب ہو سکتا ہے. اس لئے جب کبوتر پانی ہضم کر لے تو پھر اسے خوراک دیں. اور خوراک بھی اسے ایک ہی مرتبہ نہیں دینی ہے. بلکہ خوراک کی صرف دو گولیاں بنا کر کبوتر کو کھلائیں. اور تقریبا دو گھنٹے بعد جب کبوتر یہ خوراک ہضم کر لے تو پھر اسے مزید خوراک کی دوگولیاں کھلائیں. اور پھر جب انہیں بھی وہ ہضم کرنا شروع کردے تب اسے باقی خوراک دیں

لیکن اگر آپ اپنے کبوتر کو خوراک کی دو گولیاں کھلاتے ہیں اور دو گھنٹے کے دوران وہ انہیں ہضم نہیں کرتا تو پھر ایسے کبوتر کو آئیڈیل پلز کی آدھی گولی کھلا کر اوپر سے آدھا سی سی چوعرقہ میں دو سی سی سادہ پانی مکس کر کے پلا دیں.انشاء اللہ آپ کا کبوتر خوراک ہضم کرنا شروع کر دے گا. جب وہ دی ہوئی دو گولیوں کی خوراک ہضم کر لے تو پھر اسے مزید دو گولیاں خوراک کی کھلائیں لیکن ان دو گولیوں‌میں بھی آدھی آئیڈیل پلز خوب اچھی طرح مکس کر پھر کبوتر کو وہ دو گولیاں کھلائیں. انشاء اللہ آپ کا کبوتر خوراک ہضم کرنا شروع کر دے گا. اور کچھ دیر بعد مزید خوراک خود مانگنا شروع کر دے گا. تب اپنے کبوتر کو مزید خوراک اگر آپ نے دینی ہے یا پھر جو دانہ آپ نے اسے کھلانا ہے کھانے کے لئے دیں

کبوتروں کی سنبھال کی لئے یورپین ادویات کا استعمال

اب آخر میں ہم بات کریں گے یورپئین کمپنیوں‌کی خصوصی طور پر کبوتروں کی سنبھال کے لئے بنائی گئی ادویات کے بارے میں. جن کے ساتھ پرواز سے واپسی پر کبوتر کی کھوئی ہوئی توانائی کو فوری طور پر بحال کیا جا سکتا ہے. ان ادویات میں ہائی کوالٹی کے الیکٹرولائٹس، منرلز،وٹامنز اور پروٹینز شامل ہوتے ہیں. جو دوران پرواز کبوتر کے جسم میں‌ ہونے والی ٹوٹ پھوٹ کو فوری طور پر ختم کر کے اسے ریلیف پہنچاتے ہیں. اس کی کھوئی ہوئی توانائی کو بحال کر کے اسے فوری طور پر تازہ دم ہونے میں مدد دیتے ہیں. ان کمپنیز کی کبوتر کی سنبھال کے لئے بے شمار ادویات ہیں. جو پائوڈر، ٹیبلٹ، کیبسولز اورسیرپ کی شکل میں دستیاب ہیں. جیسے اوروفارما کے ریکوری کیپسولز، وکٹری پلس کے پیجن ریکوری کیپسولز، پیجن ہیلتھ اینڈ پرفارمنس کا ری کپ فاسٹ پائوڈر اور ان کے علاوہ بھی بہت ساری سنھال کی ادویات ہیں .لیکن بدقسمتی سے ہمارے کبوتر پرور دوستوں کی اکثریت کو ان کے بارے میں علم نہیں ہے. انشاء اللہ اپنے نیکسٹ آرٹیکل میں ان تمام ادویات کے بارے میں مکمل تفصیل ویب سائٹ پر شئیر کرونگا تاکہ آپ سب بھی ان سے فائدہ اٹھا سکیں

8 thoughts on “پرواز سے واپسی پے کبوتر کی سنبھال”

  1. Kindly ustad g medicine wala nuskha istemal karnay k baad kaboter key wapsi per us k morr ka tarika kindly bata dain

    Reply

Leave a Comment